پاکستانی صارفین کی ایک کروڑ 85 لاکھ سے زائد ٹک ٹاک ویڈیوز ڈیلیٹ

معروف ویڈیو شیئرنگ ایپ ٹک ٹاک نے اکتوبر سے دسمبر 2023 کے دوران پاکستانی صارفین کی ایک کروڑ 85 لاکھ  سے زائد ویڈیوز پلیٹ فارم سے ڈیلیٹ کی ہیں۔

ٹک ٹاک نے 2023 کی چوتھی سہ ماہی کے لیے کمیونٹی گائیڈ لائنز کے نفاذ کی رپورٹ جاری کی ہے۔رپورٹ کے مطابق ٹک ٹاک نے اکتوبر سے دسمبر 2023 کے دوران 17 کروڑ 46 لاکھ ایک ہزار 963 ویڈیوز کو کمیونٹی گائیڈ لائنز کی خلاف ورزی پر پلیٹ فارم سے ہٹایا۔یہ تعداد اس عرصے میں ٹک ٹاک پر پوسٹ کی جانے والی مجموعی ویڈیوز کے لگ بھگ ایک فیصد کے برابر ہے،پاکستان میں اس عرصے کے دوران ایک کروڑ 85 لاکھ 96 ہزار سے زائد ویڈیوز کو ڈیلیٹ کیا گیا۔کمپنی کے مطابق گائیڈ لائنز کی خلاف ورزی کرنے والی تقریباً 95.3 فیصد ویڈیوز کو پوسٹ کیے جانے کے 24 گھنٹوں کے اندر ڈیلیٹ کیا گیا۔ٹک ٹاک نے ایک کروڑ 98 لاکھ 48 ہزار 855 ایسے اکاؤنٹس بھی پلیٹ فارم سے ہٹائے، جن کے بنانے والوں کی عمر 13 سال سے کم تھی۔رپورٹ میں مزید بتایا گیا کہ کمیونٹی گائیڈ لائنز کے ساتھ ساتھ کمپنی نے اسپام اکاؤنٹس اور متعلقہ مواد کو بھی ہدف بنایا اور خودکار طریقے سے اسپام اکاؤنٹس کو روکنے کے لیے احتیاطی اقدامات کیے۔

خیال رہے کہ ٹک ٹاک پر روزانہ کروڑوں ویڈیوز اپ لوڈ ہوتی ہیں جن کے مواد کی جانچ پڑتال کمیونٹی گائیڈ لائنز کے اصولوں کے تحت ہوتی ہے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں