علی امین گنڈاپور کے لانگ مارچ کیس میں ناقابلِ ضمانت وارنٹ گرفتاری منسوخ

جوڈیشل مجسٹریٹ محمد نوید خان نے لانگ مارچ کیس میں مسلسل عدم پیشی پر وزیر اعلیٰ خیبرپختونخوا علی امین گنڈاپور کے ناقابل ضمانت وارنٹ گرفتاری منسوخ کر دیئے ہیں۔علی امین گنڈاپور نے ناقابل ضمانت وارنٹ گرفتاری کی منسوخی کے لیے عدالت سے رجوع کرتے ہوئے راجہ ظہورِ الحسن ایڈوکیٹ کے ذریعہ دائر درخواست میں موقف اختیار کیا کہ درخواست گزارنے کبھی جان بوجھ کر اس عدالت میں پیش ہونے سے گریز نہیں کیا۔درخواست گزار انتخابی مصروفیات کے باعث عدالت میں پیش نہیں ہو سکے.عدالتی احکامات کی حکم عدولی پر غیر مشروط معافی مانگتے ہیں.درخواست ہے کہ علی امین گنڈا پور کے 19 مارچ کو جاری کیے گئے ناقابل ضمانت وارنٹ گرفتاری منسوخ کیے جائیں۔وکیل کا یہ بھی کہناتھا کہ اسلام آباد ہائیکورٹ علی امین گنڈاپور کو اس مقدمے سے ڈسچارج کر چکی ہے.راجہ ظہور الحسن ایڈوکیٹ نے اسلام آباد ہائیکورٹ کے فیصلے کی کاپی بھی عدالت میں جمع کرا دی. جس پر عدالت نے علی امین گنڈاپور کے ناقابل ضمانت وارنٹ گرفتاری منسوخ کئے اورکیس کی مزید سماعت 20 مئی تک کیلئے ملتوی کردی۔

دوسری جانب پشاورہائیکورٹ نے علی امین گنڈاپور کیخلاف الیکشن کمیشن میں دائر درخواست پر کارروائی روک دی۔پشاورہائیکورٹ نے الیکشن کمیشن اور دیگر فریقین کو نوٹس جاری کردیا۔

اپنا تبصرہ بھیجیں