زہر دینے کا الزام بشریٰ بی بی کو کچھ ہوا تو ذمہ دار آرمی چیف ہونگے:بانی پی ٹی آئی

اسلام آباد: بانی تحریکِ انصاف عمران خان نے اپنی اہلیہ کو زہر دینے کا الزام عائد کرتے ہوئے کہا ہے کہ اگر بشریٰ بی بی کو کچھ ہوا تو ذمہ دار آرمی چیف جنرل عاصم منیر ہوں گے۔ نجی ٹی وی کی رپورٹ کے مطابق عمران خان کے خلاف اڈیالہ جیل میں 190 ملین پاؤنڈ ریفرنس کی سماعت ہوئی۔ عمران خان نے جج ناصر جاوید رانا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ بشریٰ بی بی کو بنی گالہ میں زہر دینے کی کوشش کی گئی، سابق خاتونِ اوّل کی جلد اور زبان پر نشانات موجود ہیں، عدالت ان کے مکمل چیک اپ کا حکم دے، مجھے پسِ پردہ کرداروں کا علم ہے۔گفتگو کے دوران عمران خان نے کہا کہ اگر بشریٰ بی بی کو کچھ ہوا تو ذمہ دار آرمی چیف ہوں گے۔ آئی ایس آئی بنی گالہ سے اڈیالہ جیل تک سب کچھ کنٹرول کر رہی ہے۔ بشریٰ بی بی کا معائنہ شوکت خانم ہسپتال کے ڈاکٹر عاصم کریں۔ معائنہ ایسے جونیئر ڈاکٹر نے کیا جس پر ہمیں اعتماد نہیں۔ عدالت نے عمران خان کو بشریٰ بی بی کے طبی معائنے کی درخواست دینے کی ہدایت کردی۔

دوسری جانب عدالت میں میڈیا سے گفتگو کے دوران سابق خاتونِ اوّل بشریٰ بی بی نے کہا کہ پارٹی میں باتیں پھیلائی جارہی ہیں کہ میں امریکی ایجنٹ ہوں۔ کسی نے میرے کھانے میں شبِ معراج کے روز ہارپک کے 3 قطرے ملائے۔ مجھے آنکھوں میں سوجن، سینے اور معدے میں تکلیف محسوس ہوتی ہے۔ کھانا اور پانی کڑوا لگنے لگا ہے۔ پہلے میرے شہد میں بھی کوئی چیز ملادی گئی تھی۔بشریٰ بی بی نے کہا کہ میرے کھانے میں ہارپک ملانے کی خبر مجھے جیل سے ہوئی جہاں کسی نے یہ بات بتائی تھی، اس کا نام نہیں بتاؤں گی۔ بنی گالہ میں باعزت طریقے سے رہتی ہوں. پہلے کھڑکیاں بند ہوتی تھیں، اب کچھ دیر کیلئے کھولی جاتی ہیں۔ ملک کے جج اور ادارے بندے کھا رہے ہیں۔ پنجابی کہاوت ہے کہ بندہ بندے نوں کھا جاندا اے۔ یہ اب سمجھ میں آئی ہے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں